امریکی صدارتی انتخاب ،ووٹنگ آج ہو گی

واشنگٹن: امریکی شہری آج اپنے 46 صدر کو منتخب کرنے یا 45 ویں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو دوبارہ منتخب کرنے کے لیے ووٹ ڈالیں گے تاہم اس موقع پر ایک برطانوی جواری نے جوبائیڈن کے جیتنے پر 1.3 ملین امریکی ڈالر کی شرط لگا دی ہے۔

انڈی پینڈنٹ اردو کے مطابق ایک برطانوی کمپنی کا کہناہے کہ برطانوی جواری نے جوبائیڈن کے جیتنے پر 1.3 ملین امریکی ڈالر کی شرط لگا دی ہے ، برطانوی بیٹنگ کمپنی کا کہناہے کہ جوبائیڈن کی جیت پر جمع کی جانے والی رقم اب تک کی سب سے بڑی سیاسی شرط ہے ، جوئے باز 4.54 ملین ڈالرز جیت سکتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اب تک 9 کروڑ 40 لاکھ کے قریب امریکی شہری پہلے ہی ووٹ دے چکے ہیں، سیاسی پنڈت اب بھی تذبذب کا شکار ہیں کہ معرکہ کون مارے گا اور ڈیموکریٹ جو بائیڈن کے کلین سویپ کرنے سے موجودہ ریپبلکن صدر کی واضح کامیابی تک پیش گوئیوں میں تضاد ہے۔اس غیر یقینی کی وجہ صرف ایک یعنی عالمی وبا کووِڈ 19 ہے، جنوری میں محض چند امریکیوں نے ہی کورونا وائرس کا نام سنا تھا جبکہ 2 نومبر تک یہ وائرس امریکا میں 2 لاکھ 20 ہزار سے زائد افراد کو لقمہ اجل اور 92 لاکھ تک کو متاثر کرچکا ہے۔

یاد رہے کہ 1984 سے اب تک الیکشنوں کی درست پیشگوئی کرنے والے تاریخ دان اور پروفیسر ” ایلن لیکمین “ نے اس مرتبہ جوبائیڈن کی کامیابی کی پیشگوئی کر دی ہے اور کہاہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ صدر ایچ ڈبلیو بش کے بعد پہلے صدر ہوں گے جو کہ ری الیکشن جیت نہیں پائیں گے ۔

تبصرے

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here