چینی فوج اتراکھنڈ میں 5 کلومیٹر تک اندر آئی اور پل تباہ کردیا: بھارتی میڈیا

چین اور بھارت کے درمیان لائن آف ایکچوئل کنٹرول (ایل اے سی) پر ایک بار پھر کشیدگی کا واقعہ رونما ہوا ہے۔

بھارت اور چین کے درمیان لداخ واقعے کے بعد ایک بار پھر بھارتی ریاست اتراکھنڈ کے مقام پر سرحدی کشیدگی کا واقعہ پیش آیا ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ 30 اگست کو 100 چینی فوجی اہلکار اور 55 گھوڑے بھارتی حدود میں داخل ہوئے۔

رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ چینی فوجی اتراکھنڈ کے علاقے براہوتی میں 5 کلومیٹر اندر تک داخل ہوئے اور کئی گھنٹے تک گشت کرتے رہے۔

رپورٹس کے مطابق چینی فوجیوں نے واپسی جاتے ہوئے ایک پل کو بھی تباہ کیا جبکہ اس کے علاوہ بھی توڑ پھوڑ کی ہے۔

واقعے کے حوالے سے تاحال بھارت اور چین کا کوئی مؤقف سامنے نہیں آیا ہے تاہم بھارتی حکومت کو اپوزیشن کی جانب سے ایک بار پھر سخت تنقید کا سامنا ہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ سال چین اور بھارت کے درمیان متنازع سرحدی علاقے لداخ میں چینی افواج سے جھڑپوں میں بھارتی فوج کے کرنل سمیت 20 فوجی مارے گئے تھے۔

تبصرے

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here