پشاور میں وزیراعظم کے کزن نوشیروان برکی پر انڈے پھینکنا ڈاکٹر کو مہنگا پڑ گی

اسلام آباد: عمران خان کے کزن نوشیروان برکی پر انڈے پھینکنے والے ڈاکٹر کو ملازمت سے نکالنے کی سفارش کردی گئی ہے۔

واقعے کی تفتیش کرنے والی خیبر ٹیچنگ ہسپتال کی منجمنٹ کمیٹی نے ڈاکٹر ضیاالدین کوملازمت سے نکالنے کی سفارش کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے بار بار بلانے کے باوجود وضاحت نہیں دی۔کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ ڈاکٹر ضیا الدین نے 14 مئی 2019 کوچیرمین پالیسی بورڈ ڈاکٹر نوشیروان پر گندے انڈے پھینکے۔ ڈاکٹرضیا کو پہلے بھی نا مناسب رویے پر نوٹس بھیجے جاچکے ہیں۔

تفتیش کاروں نے کہا سفارش کی ہے کہ ڈاکٹرضیا کو فوری طور پرملازمت سے برطرف کیا جائے۔دوسری جانب ڈاکٹر ضیاءالدین نے کہا کہ انہیں انتقامی کارروائی کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

ان کا موقف ہے کہ وزیرصحت کے غنڈوں نے تشدد کیا اورمیرے خلاف ہی ایف ائی ار کاٹی گئی۔خیال رہے کہ پانچ ماہ قبل خیبرٹیچنگ ہسپتال پشاورمیں بورڈ آف گورنرز کے اجلاس کے دوران تلخ کلامی کے بعد مشتعل ڈاکٹر نے مبینہ طورپر وزیراعظم کے کزن ڈاکٹر نوشیروان برکی پر انڈے ماردیے تھے جس پر ہنگامہ کھڑا ہوگیا اورڈاکٹر نوشیروان برکی کوبچاتے ہوئے وزیرصحت ڈاکٹر ہشام انعام اللہ بھی زخمی ہوگئے تھے۔

تبصرے

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here