لاہور جلسہ، مسلم لیگ ن 5 لاکھ ماسک کارکنوں میں تقیسم کرے گی

 لاہور: مسلم لیگ(ن)نے لاہور جلسہ میں کورونا سے بچاؤ کیلئے احتیاطی تدابیر پر عمل پیرا ہونے کا فیصلہ کرتے ہوئے پہلے مر حلے میں پانچ لاکھ ماسک تیار کرنے کی منظوری دیدی،جن پر ووٹ کو عزت دو کے نعرے درج ہونگے۔

مسلم لیگ (ن) میں کورونا کے حوالے سے بچاؤ پر بات چیت ہوئی جس میں طے کیا کہ 13دسمبر کو لاہورمیں ہونیوالے جلسے میں شریک افراد کو ماسک مہیا کئے جائیں جس کے پیش نظر مسلم لیگ (ن) نے پانچ لاکھ ماسک تیار کروانے کا فیصلہ کیا ہے مسلم لیگ (ن)پنجاب کے صدر رانا ثنا اللہ نے ماسک تیار کروانے کی منظوری دی۔دریں اثنا پاکستان مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر رانا ثنا اللہ نے پارٹی سیکرٹریٹ ماڈل ٹاون کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا انتخابی اصلاحات، گلگت بلتستان صوبہ، معاشی کے حوالے سے شہباز شریف نے ایوان میں وزیراعظم کو میثاق کی پیشکش کی تھی،تب ہمیں چور اور ڈاکو کہہ کر گالیاں دی گئیں،ہم نے کہا تھا اپوزیشن کیساتھ ڈائیلاگ کیا جائے،اب ڈھائی سال بعد انہیں یاد آیا لیکن اب اپوزیشن اس سلیکٹڈ وزیراعظم کیساتھ بیٹھنے کو تیار نہیں، نئے انتخابات ہونا چاہییں اور صحیح جمہوری و آئینی حکومت آنی چاہیے۔

احتساب عدالت کا مشکور ہوں کہ شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو عدالت نے بکتر بند گاڑی میں لانے سے روک دیا ہے،اگر عدالتیں عمران خان کے اندھے انتقام کے آگے بند باندھیں گی تو ہی معاشرہ آگے بڑھ سکے گا۔نیب خود محکوم و یرغمال ادارہ ہے جس کا چیئرمین شہزاد اکبر کے ہاتھوں یرغمال جبکہ اینٹی کرپشن کا ڈی جی شہزاد اکبر کا پٹھہ ہے۔عدالت کو ان کا نوٹس بھی لینا چاہیے۔اینٹی کرپشن نے اب یونین کونسل سطح پر ہمارے کارکنوں کو تنگ کرنا شروع کر دیا ہے۔پشاور اور ملتان میں بھرپور جلسے ہوں گے،اس کے بعد 13 دسمبر کو لاہور میں جلسہ ہو گا۔اگر کورونا جلسہ سے پھیلتا ہے تو پہلے گوجرانوالہ میں سمارٹ لاک ڈاون ہونا چاہیے جہاں سے کورونا بھاگ چکا ہے۔ملتان جلسے کے بعد کورونا وہاں سے بھی بھاگ جائیگا۔

حکومت اپوزیشن کے پرامن جلسوں کی بھی تاب نہیں لا پا رہی تو کل کو دوسرے مرحلے میں ان کا کیا حال ہو گا۔اب عام انتخابات ہوں گے اور بلدیاتی الیکشن کی ضرورت نہیں۔2021 میں پی ڈی ایم کی کوششوں سے عام انتخابات ہوں گے۔ہمیں لاہور جلسے کیلئے حکومت کی اجازت کی ضرورت نہیں، سی سی پی او کو بتا دیا اگر جلسہ سے روکا گیا تو پھر لاہور بھر میں جلسے ہوں گے۔ا سلا م آباد ہائیکورٹ نے جلسہ کرنے سے منع نہیں کیا بلکہ احتیاط کرنے کا کہا ہے۔

تبصرے

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here