برطانیہ نے پاکستان کو ریڈ لسٹ سے نکال دیا

لندن: برطانیہ نے پاکستان کو ریڈ لسٹ سے نکال دیا ہے۔

پاکستان میں برطانیہ کے ہائی کمشنر کا کہنا ہے کہ اس بات کا اعلان کرتے ہوئے خوشی ہور ہی کہ پاکستان کو ریڈ لسٹ سے نکال دیا گیا ہے۔ مجھے معلوم ہے کہ گزشتہ پانچ ماہ پاکستان اور برطانیہ کے بہت سے لوگوں کے لیے مشکل تھے۔ پاکستان اور برطانیہ مل کر کام کرتے رہیں گے۔انہوں نے اپنی ٹویٹ میں وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر اور وزارت صحت کا شکریہ بھی ادا کیا۔برطانیہ نے پاکستان سمیت آٹھ ممالک کو ریڈ لسٹ سے نکالنے کا فیصلہ کیا ہے،دیگر ممالک میں ترکی، مصر، مالدیپ، سری لنکا، کینیا، عمان اور بنگلہ دیش شامل ہیں۔برطانیہ نے اس فیصلے کی ساتھ سفری پابندیوں کی نئی درجہ بندی بھی کردی ہے۔پاکستان کو ریڈ لسٹ سے نکالنے کے فیصلے کا اطلاق 22 ستمبر سے ہوگا۔

واضح رہے کہ برطانیہ نے پاکستان کو رواں سال9 اپریل سے سفری پابندیوں کی ریڈ لسٹ میں شامل کر رکھا تھا جبکہ گذشتہ ماہ انڈیا کو اس فہرست سے نکال دیا گیا تھا تاہم پاکستان کو اسی فہرست میں برقرار رکھا گیا جس پر پاکستان نے برطانوی حکومت سے مطالبہ کیا تھا کہ پاکستان کو فوری ریڈ لسٹ سے نکالا جائے ۔دو روز قبل وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا تھا کہ برطانوی وزارت صحت کے حکام اور ماہرین سے انکی تفصیلی بات چیت ہوئی ہے،پاکستان نے برطانیہ کی سفری پابندیوں کی ریڈ لسٹ سے نکلنے کے لیے برطانیہ کو کورونا کے اعداد وشمار فراہم کر دیے ہیں اور ہمارے ڈیٹا کی درستگی میں کوئی شک و شبہ نہیں ہے۔یاد رہے کہ گذشتہ ماہ مقامی میڈیا کے مطابق برطانوی حکومت نے دعویٰ کیا تھا کہ پاکستانی حکام کورونا وائرس کے اعداد و شمار سے آگاہ نہیں کررہے ہیں لہٰذا پاکستان کو ریڈ لسٹ میں رکھا گیا ہے۔

تبصرے

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here