سابق وزیر اعظم نواز شریف نے اسپتال منتقلی کا مشورہ مسترد کر دیا

لاہور:سابق وزیر اعظم نواز شریف نے اپنے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان کی جانب سے ہسپتال منتقل ہونے کا مشورہ مسترد کردیا۔

سابق وزیر اعظم نواز شریف سے کوٹ لکھپت جیل لاہور میں ان کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے ملاقات کی اور نواز شریف سے ان کی صحت کے بارے میں تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔

نجی ٹی وی ’’جیو نیوز‘‘ نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ ڈاکٹر عدنان نے نواز شریف کو ہسپتال میں داخل ہو کر اپنے تمام ٹیسٹ کروانے کا مشورہ دیا لیکن نواز شریف نے ہسپتال منتقل ہونے کا مشورہ مسترد کردیا۔

ڈاکٹر عدنان نے جیل حکام کو نواز شریف کی ای سی جی اور دیگر ٹیسٹ کروانے کا کہا ہے۔

اگلے 24 گھنٹوں کے دوران جیل میں ہی نواز شریف کے ٹیسٹ کرائے جائیں گے۔ ٹیسٹوں کی رپورٹ آنے کے بعد ڈاکٹر عدنان دوبارہ نواز شریف سے ملاقات کریں گے۔

تبصرے

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here